بلوچ سرزمین پر قابض ریاستوں کا بلوچ دشمن خندقیں اور دیواریں کھڑی کرنے کا مشترکہ شازش

بلوچ سرزمین پر قابض ریاستوں کا بلوچ دشمن خندقیں اور دیواریں کھڑی کرنے کا مشترکہ شازش

2020-03-31 12:23:42
Share on

Saturday, September 13

ایرانی رجعت پسند حکومت نے مغربی اور مشرقی بلوچستان میں ظاھری طور پر منشیات کی روک تھام کا نام دیکر 2007 میں کئی گہری فٹ خندقیں کھونے اور دیواریں کھڑی کرنے کا باقاعدہ طور پر آغار کیا جس میں بلوچستان کی ساحلی بیلٹ سے لیکر سے افغانستان کا سرحدی علاقہ شامل ھے جھاں پر بلوچستان کی حدود ختم ھوتی ھے یہ تقرببآ 700 کیلومیٹر لمبی ھے اور اسکا اب 90 % تعمیر تکمیل تک پہنچ چکا ھے۔
اس منصوبے میں ایران نے ایک کثیر رقم 590 میلیون ڈالرکا متخص کیا، اتنی بڑی رقم اس منصوبہ پر خرچ کرنا بلوچستان کی قومی آزادی کی تحریک کے خطرات کو روکنے اور بلوچ قومی رابطے کو منقطع کرنا اور کلچری اور اقتصادی طور پر انھیں مفلوج کرنا ھے تا کہ اس قومی آزادی کی تحریک کو فعال ھونے سے مختلف حوالے سے روک تھام کی جاسکے ۔
اپریل 2011 کو کو سابق ایرانی وزیر دفاع جنرل احمد وحیدی نے پاکستان کو مشرقی بلوچستان اور افغان سرحد پر خندقیں کھودنے پر تمام اخراجات کو ادا کرنے اور اس پر خفیہ طور پر دستخط بھی کئے گئے اور اس رقم کی ایک قسط بھی پاکستانی فوج اور اداروں کو دیگئی، مگر پاکستان کی طرف سے اس منصوبہ پر عمل درآمد تعطل کا شکار رھا۔ اب ایرانی حکومت کے دوبارہ اصرار پر اس کام کا آغاز پاکستانی فوج اور ایرانی ماھرین کی نگرانی میں چند ھفتوں سے جاری ھے۔ اور اسکے تمام اخراجات اور اس منصوبہ کو عملی جامع پہنانے کے لئے پاکسانی افسران کی خوش آمد کے لئے بڑی رقم متخص کی گئی ھے۔

Anti-B8 1

Share on
Previous article

قلات و نوشکی میں بڑے پیمانے پہ فوجی نقل و حرکت کی اطلاع

NEXT article

جیش العدل کا آسکان سراوان میں پاسداران کے کیمپ پر حملہ، 10 پاسدار ھلاک ، 2 ٹینک اور کیمپ تباہ

LEAVE A REPLY

MUST READ

کانسارها ومعادن مس در بلوچستـان اشغالی

کانسارها ومعادن مس در بلوچستـان اشغالی

پاکستانی جرنسلٹ اور بقول بلوچ جھدوجھد کا حامی حامد میر کے نام

پاکستانی جرنسلٹ اور بقول بلوچ جھدوجھد کا حامی حامد میر کے نام

کوردستـــان ءِ پلیـــں شهیـــدان ءَ هـــزاراں ســـــلام

کوردستـــان ءِ پلیـــں شهیـــدان ءَ هـــزاراں ســـــلام

به گروگان گرفتن زنان و کودکان بلوچ اوج ذلت وحقارت اشغالگران

به گروگان گرفتن زنان و کودکان بلوچ اوج ذلت وحقارت اشغالگران

پگری گلامی – گُڈی بهر

پگری گلامی – گُڈی بهر

واجہ شھید غلام محمد بلوچءِ آخرین تران گون گوانکءَ, واجہ ءِ اے تران 1 اپریل 2009 گرگ بوتگ

واجہ شھید غلام محمد بلوچءِ آخرین تران گون گوانکءَ, واجہ ءِ اے تران 1 اپریل 2009 گرگ بوتگ

چرا کمبود آب “مسئله امنیتی” شــد؟

چرا کمبود آب “مسئله امنیتی” شــد؟

میر دوست مھمد ھان ءَ چو میر مھراب ھان ءِ وڑا سر جَھل نہ کرتگ اَت ءُ ایرانی بادشاہانی گُلامی نہ منّ اتگ اَت ۔ ھیر بیار

میر دوست مھمد ھان ءَ چو میر مھراب ھان ءِ وڑا سر جَھل نہ کرتگ اَت ءُ ایرانی بادشاہانی گُلامی نہ منّ اتگ اَت ۔ ھیر بیار

حسیـن معروفـی کیست؟

حسیـن معروفـی کیست؟

شھید الیاس نزرءِ ماتءِ کلوّہ

شھید الیاس نزرءِ ماتءِ کلوّہ

پاکستان پنجابیوں کے مفادات کی تحفظ کے لئے بنایا گیا ہے: حیر بیار مری

پاکستان پنجابیوں کے مفادات کی تحفظ کے لئے بنایا گیا ہے: حیر بیار مری

مانداشتــگ اِت ڈیه ءَ مئے آســے تئـے هَنـکیں کپـات

مانداشتــگ اِت ڈیه ءَ مئے آســے تئـے هَنـکیں کپـات

بیست ءُ یک فروری ماتی زبانانی میان اُستمانی روچءِ بابتءَ گپ وترانے گون پروفیسرعبدالواحد بزدارءَ

بیست ءُ یک فروری ماتی زبانانی میان اُستمانی روچءِ بابتءَ گپ وترانے گون پروفیسرعبدالواحد بزدارءَ

کھنیں دپتر— — گپ و ترانے گون شھید نواب محمد اکبر بگٹيءَ گون ریڈیو بلوچيءِ

کھنیں دپتر— — گپ و ترانے گون شھید نواب محمد اکبر بگٹيءَ گون ریڈیو بلوچيءِ

گپ وتران گون شہید محمد اکبر خان بگٹی ء 20060402 گون ریڈیو بلوچی ایف ایم

گپ وتران گون شہید محمد اکبر خان بگٹی ء 20060402 گون ریڈیو بلوچی ایف ایم