حادثے میں لانگ مارچ میں شریک دو افراد زخمی

MUST READ

واجہ شھید پروفیسر صبا دشیاريءِ 26 اگست 2009ءَ بلوچستان لیبریش چارٹر ءُ آھيءِ رھدربريءِ بابتءَ تران

واجہ شھید پروفیسر صبا دشیاريءِ 26 اگست 2009ءَ بلوچستان لیبریش چارٹر ءُ آھيءِ رھدربريءِ بابتءَ تران

منی غیر بلوچیں معلمءَ منا هر وهد توهین کت ءُ جہل جت و کوشیشت کرت کہ من وانگءَ هلاس به کنان . سامان ریگی

منی غیر بلوچیں معلمءَ منا هر وهد توهین کت ءُ جہل جت و کوشیشت کرت کہ من وانگءَ هلاس به کنان . سامان ریگی

اپوزیسیون مرکزگرای پارس چه در سر دارد؟

اپوزیسیون مرکزگرای پارس چه در سر دارد؟

جھد ؤ تپاکی

جھد ؤ تپاکی

ایران ءِ پد منتگیں بُن رهبندءِ یک بَروَردے

ایران ءِ پد منتگیں بُن رهبندءِ یک بَروَردے

بلوچ ورنایانی راجی بیداری

بلوچ ورنایانی راجی بیداری

موضع دولت بحرین باید صریح تر باشد

موضع دولت بحرین باید صریح تر باشد

پشتون قوم دوست روڑ ،نالی کی سیاست سے نکل کر پاکستانی قبضہ گریت کے خلاف آواز بلند کریں : حیربیار مری

پشتون قوم دوست روڑ ،نالی کی سیاست سے نکل کر پاکستانی قبضہ گریت کے خلاف آواز بلند کریں : حیربیار مری

گرامی باد خاطرهٔ قربانیان مذاکره با حکام مرکزی ایران

گرامی باد خاطرهٔ قربانیان مذاکره با حکام مرکزی ایران

مساحــت بلوچستــــان اشغالــــی

مساحــت بلوچستــــان اشغالــــی

گپ ءُ ترانے گون جنوبی کوریاءِ بلوچ اکٹیوسٹ واجہ نصیربلوچءَ لانگ مارچءِ بابتءَ

گپ ءُ ترانے گون جنوبی کوریاءِ بلوچ اکٹیوسٹ واجہ نصیربلوچءَ لانگ مارچءِ بابتءَ

کوردستـــان ءِ پلیـــں شهیـــدان ءَ هـــزاراں ســـــلام

کوردستـــان ءِ پلیـــں شهیـــدان ءَ هـــزاراں ســـــلام

بلوچستان اِشغالی در چنگال خونینِ غارتگران

بلوچستان اِشغالی در چنگال خونینِ غارتگران

گوانڈین ریڈیو رپورٹءِ چا تمپءَ

گوانڈین ریڈیو رپورٹءِ چا تمپءَ

بیست ءُ یک فروری ماتی زبانانی میان اُستمانی روچءِ بابتءَ گپ وترانے گون بانک کارینا جهانیءَ

بیست ءُ یک فروری ماتی زبانانی میان اُستمانی روچءِ بابتءَ گپ وترانے گون بانک کارینا جهانیءَ

حادثے میں لانگ مارچ میں شریک دو افراد زخمی

2020-03-27 11:10:44
Share on

Saturday, February 08, 2014

صوبہ پنجاب کے ضلع اوکاڑہ میں پولیس حکام کے مطابق ’وائس فار بلوچ مسنگ پرسنز‘ کے مارچ کے شرکا کو پیش آنے والے حادثے میں دو افراد زخمی ہو گئے۔

’وائس فار بلوچ مسنگ پرسنز‘ کا کراچی سے اسلام آباد تک پیدل مارچ صوبہ پنجاب کے شہر اوکاڑہ میں سے گزر رہا ہے جہاں رینالہ خورد کے قریب مارچ میں شریک افراد کے مطابق انھیں ایک ٹرک نے ٹکر مار کر کچلنے کی کوشش کی۔

اسی بارے میںدوسری جانب مارچ کی حفاظت پر مامور پولیس کے اہلکاروں میں سے ایک اے ایس آئی نے بتایا کہ یہ ایک حادثہ تھا اور ٹرک بریک فیل ہونے کے نتیجے میں ان افراد سے ٹکرا گیا تھا۔

پولیس اہلکار نے بتایا کہ صوبہ پنجاب میں داخلے کے ساتھ ہی پنجاب پولیس ان کی حفاظت کے لیے انتظامات کر رہی ہے اور ان کے ساتھ ہر وقت ایک پولیس موبائل ٹیم اور ٹریفک پولیس کے اہلکار ہوتے ہیں جو انھیں ایک حفاظتی حصار میں لے کر چلتے ہیں۔

مارچ کی قیادت کرنے والے وائس فار مسنگ بلوچ پرسنز کے ماما قدیر نے بتایا کہ’ایک ٹرک نے انھیں اور مارچ میں شریک افراد کو ٹکر مار کر کچلنے کی کوشش کی جس کے نتیجے میں انھیں اور دو اور افراد کو چوٹیں لگیں۔‘

مارچ کے شرکا کا اصرار ہے کہ ان کی سکیورٹی کے لیے انتظامات مناسب نہیں ہیں اور وہ موجودہ انتظامات سے مطمئن نہیں ہیں۔

انہوں نے مزید بتایا کہ انہیں دھمکیاں مل رہی ہیں اور لوگ انہیں گالیاں دیتے ہیں اور مبینہ طور پر پاگل کہتے ہیں۔

’وائس فار بلوچ مسنگ پرسنز‘ کے ٹوئٹر اکاؤنٹ سے یہ تصویر جاری کی گئی جو ماما قدیر کی ہے

تھانہ رینالہ خورد کے ایک اہلکار کے مطابق ٹرک ڈرائیور موقع سے فرار ہو گیا جس کی تلاش جاری ہے تاہم اس واقعے کی کوئی ایف آئی آر درج نہیں کی گئی ہے۔

بلوچستان سے اسلام آباد تک لانگ مارچ کے دوسرے مرحلے کا آغاز جمعہ 13 دسمبر 2013 کو کیا گیا تھا جو سندھ سے گزرتا ہوا سنیچر 18 جنوری 2014 کو پنجاب میں داخل ہوا۔

کراچی سے 36 روز کا پیدل سفر کر کے یہ مارچ پنجاب میں داخل ہوا تھا جو آنے والے ہفتے میں لاہور پہنچے گا۔

Share on
Previous article

Truck hits marchers of Long March, two injured

NEXT article

بلوچستان میں انسانی حقوق کی پامالیوں کے خلاف برطانیہ اور یورپی ممالک میں2 ماہی آگاہی مہم چلانے کا فیصلہ۔

LEAVE A REPLY