حادثے میں لانگ مارچ میں شریک دو افراد زخمی

MUST READ

سچ وہی جو جھوٹا بولے – کردگار بلوچ

سچ وہی جو جھوٹا بولے – کردگار بلوچ

شهید فدا احمدءِ تران

شهید فدا احمدءِ تران

’چھ ہزار بلوچ جنگجو پاکستانی فوج کیخلاف مزاحمت کر رہے ہیں‘ ڈاکٹر اللہ نذر بلوچ

’چھ ہزار بلوچ جنگجو پاکستانی فوج کیخلاف مزاحمت کر رہے ہیں‘ ڈاکٹر اللہ نذر بلوچ

وقت کا بھی یہی تقاضا ہے کہ ہم قابضین کی مسلط کردہ نظام کو مضبوط بنانے کے بجائے قومی سوچ کو وسعت دیں

وقت کا بھی یہی تقاضا ہے کہ ہم قابضین کی مسلط کردہ نظام کو مضبوط بنانے کے بجائے قومی سوچ کو وسعت دیں

مروچی 30 اگست 2013ءَ بیگواہ بوتگین مردومانی میان استمانی روچءِ درگتءَ وائس فار بلوچ میسنگ پرسنانی سروک واجہ قدیر بلوچءِکلوه پا بلوچ راجءَ

مروچی 30 اگست 2013ءَ بیگواہ بوتگین مردومانی میان استمانی روچءِ درگتءَ وائس فار بلوچ میسنگ پرسنانی سروک واجہ قدیر بلوچءِکلوه پا بلوچ راجءَ

Pakistani security forces attacked across Balochistan, Two PAF personnel killed in Pasni

Pakistani security forces attacked across Balochistan, Two PAF personnel killed in Pasni

مشکے میں فوجی آپریشن

مشکے میں فوجی آپریشن

بلوچ بواگءِ جرمءَ گون ما اے وڑیں سلوک کنگ بواگءَ انت – بلوچ نرسنگ کمیٹی

بلوچ بواگءِ جرمءَ گون ما اے وڑیں سلوک کنگ بواگءَ انت – بلوچ نرسنگ کمیٹی

نواب بگٹیءُ بلوچی شان

نواب بگٹیءُ بلوچی شان

بلوچ ورنایانی راجی بیداری

بلوچ ورنایانی راجی بیداری

فری بلوچستان موومنٹ برطانیہ برانچ کا آن لائن اجلاس، 13 نومبر کے دن مختلف پروگرامز منعقد کرنے کا اعلان

فری بلوچستان موومنٹ برطانیہ برانچ کا آن لائن اجلاس، 13 نومبر کے دن مختلف پروگرامز منعقد کرنے کا اعلان

بیست ءُ یک فروری ماتی زبانانی میان اُستمانی روچءِ بابتءَ گپ وترانے گون بانک کارینا جهانیءَ

بیست ءُ یک فروری ماتی زبانانی میان اُستمانی روچءِ بابتءَ گپ وترانے گون بانک کارینا جهانیءَ

بلوچستانءَ انسانی حقانی لگتمالی ءُ زوراکیانی آماچ بوتگین بلوچانی فریات – دُومی بهر

بلوچستانءَ انسانی حقانی لگتمالی ءُ زوراکیانی آماچ بوتگین بلوچانی فریات – دُومی بهر

بر دانش آموزان بلـوچ چه می گـذرد؟ بخش آخـر

بر دانش آموزان بلـوچ چه می گـذرد؟ بخش آخـر

بلــوچ هُـــژّار

بلــوچ هُـــژّار

حادثے میں لانگ مارچ میں شریک دو افراد زخمی

2020-03-31 16:38:05
Share on

Saturday, February 08, 2014

صوبہ پنجاب کے ضلع اوکاڑہ میں پولیس حکام کے مطابق ’وائس فار بلوچ مسنگ پرسنز‘ کے مارچ کے شرکا کو پیش آنے والے حادثے میں دو افراد زخمی ہو گئے۔

’وائس فار بلوچ مسنگ پرسنز‘ کا کراچی سے اسلام آباد تک پیدل مارچ صوبہ پنجاب کے شہر اوکاڑہ میں سے گزر رہا ہے جہاں رینالہ خورد کے قریب مارچ میں شریک افراد کے مطابق انھیں ایک ٹرک نے ٹکر مار کر کچلنے کی کوشش کی۔

اسی بارے میںدوسری جانب مارچ کی حفاظت پر مامور پولیس کے اہلکاروں میں سے ایک اے ایس آئی نے بتایا کہ یہ ایک حادثہ تھا اور ٹرک بریک فیل ہونے کے نتیجے میں ان افراد سے ٹکرا گیا تھا۔

پولیس اہلکار نے بتایا کہ صوبہ پنجاب میں داخلے کے ساتھ ہی پنجاب پولیس ان کی حفاظت کے لیے انتظامات کر رہی ہے اور ان کے ساتھ ہر وقت ایک پولیس موبائل ٹیم اور ٹریفک پولیس کے اہلکار ہوتے ہیں جو انھیں ایک حفاظتی حصار میں لے کر چلتے ہیں۔

مارچ کی قیادت کرنے والے وائس فار مسنگ بلوچ پرسنز کے ماما قدیر نے بتایا کہ’ایک ٹرک نے انھیں اور مارچ میں شریک افراد کو ٹکر مار کر کچلنے کی کوشش کی جس کے نتیجے میں انھیں اور دو اور افراد کو چوٹیں لگیں۔‘

مارچ کے شرکا کا اصرار ہے کہ ان کی سکیورٹی کے لیے انتظامات مناسب نہیں ہیں اور وہ موجودہ انتظامات سے مطمئن نہیں ہیں۔

انہوں نے مزید بتایا کہ انہیں دھمکیاں مل رہی ہیں اور لوگ انہیں گالیاں دیتے ہیں اور مبینہ طور پر پاگل کہتے ہیں۔

’وائس فار بلوچ مسنگ پرسنز‘ کے ٹوئٹر اکاؤنٹ سے یہ تصویر جاری کی گئی جو ماما قدیر کی ہے

تھانہ رینالہ خورد کے ایک اہلکار کے مطابق ٹرک ڈرائیور موقع سے فرار ہو گیا جس کی تلاش جاری ہے تاہم اس واقعے کی کوئی ایف آئی آر درج نہیں کی گئی ہے۔

بلوچستان سے اسلام آباد تک لانگ مارچ کے دوسرے مرحلے کا آغاز جمعہ 13 دسمبر 2013 کو کیا گیا تھا جو سندھ سے گزرتا ہوا سنیچر 18 جنوری 2014 کو پنجاب میں داخل ہوا۔

کراچی سے 36 روز کا پیدل سفر کر کے یہ مارچ پنجاب میں داخل ہوا تھا جو آنے والے ہفتے میں لاہور پہنچے گا

Share on
Previous article

Truck hits marchers of Long March, two injured

NEXT article

FRIENDS OF MY NATION

LEAVE A REPLY