دنیا کو بلوچستان میں قتل عام و جبری گمشدگیوں پر خاموشی توڑنی چاہیے – ڈاکٹر اللہ نذر بلوچ

MUST READ

کراچی پر یس کلب کے سامنے بلوچ ہیومن رائٹس آرگنائزیشن کا احتجاجی مظاہرہ

کراچی پر یس کلب کے سامنے بلوچ ہیومن رائٹس آرگنائزیشن کا احتجاجی مظاہرہ

زبان

زبان

حالیہ نصیرآباد میں بلوچ خواتین اور بچوں کی پاکستانی فوج کی جانب سے اغواه کی شدید مذمت کرتا هوں بے – جی پی کے ترجمان انیل بالونی صاحب

حالیہ نصیرآباد میں بلوچ خواتین اور بچوں کی پاکستانی فوج کی جانب سے اغواه کی شدید مذمت کرتا هوں بے – جی پی کے ترجمان انیل بالونی صاحب

موضع دولت بحرین باید صریح تر باشد

موضع دولت بحرین باید صریح تر باشد

نوکترین حال Saturday, October 17, 2015

نوکترین حال Saturday, October 17, 2015

مروچی تربتءِ ریلیءَ من چہ دیست

مروچی تربتءِ ریلیءَ من چہ دیست

مروچی زرینہ مری ءُ مراد مریءَ پرین 3798 روچ انت کہ بیگواہ انت

مروچی زرینہ مری ءُ مراد مریءَ پرین 3798 روچ انت کہ بیگواہ انت

فری بلوچستان مومنٹءِ لانگ مارچءَ کل بلوچان بهر زورگءِ دستبندی کنگ بیت – بلوچ دحتگ مَهگُونَگ

فری بلوچستان مومنٹءِ لانگ مارچءَ کل بلوچان بهر زورگءِ دستبندی کنگ بیت – بلوچ دحتگ مَهگُونَگ

واجه عبدالصمد امیریءِ تپاکیءِ پیغام پا بلوچ راجءَ

واجه عبدالصمد امیریءِ تپاکیءِ پیغام پا بلوچ راجءَ

نواب اکبرخانِءِ سالروچءِ درگتءَ تران

نواب اکبرخانِءِ سالروچءِ درگتءَ تران

گیبن کیچءَ 13 اپریلءَ 2015 پاکستانی فوجی آپریشنءِ حقیقت

گیبن کیچءَ 13 اپریلءَ 2015 پاکستانی فوجی آپریشنءِ حقیقت

سویڈش شوشلیٹ پاڑٹی کے کریسٹوفر لونڈ بیری 10دسمبر2015 کو گوتنبرگ میں بولان کے بلوچ خواتین کی پاکستانی فورسز کی توسط سے اغواه کے خلاف مظاهرہ سے خطاب کررهے هیں

سویڈش شوشلیٹ پاڑٹی کے کریسٹوفر لونڈ بیری 10دسمبر2015 کو گوتنبرگ میں بولان کے بلوچ خواتین کی پاکستانی فورسز کی توسط سے اغواه کے خلاف مظاهرہ سے خطاب کررهے هیں

استقلال کوردستان مبارک باد

استقلال کوردستان مبارک باد

قمبرچاکرءِ زندءِ سرا چماشانکے

قمبرچاکرءِ زندءِ سرا چماشانکے

جیش العدل کا آسکان سراوان میں پاسداران کے کیمپ پر حملہ، 10 پاسدار ھلاک ، 2 ٹینک اور کیمپ تباہ

جیش العدل کا آسکان سراوان میں پاسداران کے کیمپ پر حملہ، 10 پاسدار ھلاک ، 2 ٹینک اور کیمپ تباہ

دنیا کو بلوچستان میں قتل عام و جبری گمشدگیوں پر خاموشی توڑنی چاہیے – ڈاکٹر اللہ نذر بلوچ

2020-03-26 13:39:55
Share on

کوئٹہ / بلوچ قوم دوست و آزادی پسند رہنماڈاکٹر اللہ نذر بلوچ نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ” ٹوئٹر‘‘ پر اپنے چند تازہ ترین ٹوئیٹ پیغام میں بلوچستان میں ہزاراہ برادری کی ٹارگٹ کلنگ کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ میں بلوچستان میں ہزارہ برادری کی ٹارگٹ کلنگ کی پرزور مذمت کرتا ہوں۔ یہ بلوچ تحریک آزادی کو کمزور کرنے کی ایک سازش ہے۔ 

انہوں نے ڈیرہ بگٹی میں پاکستانی فوج کے ہاتھوں حالیہ فوجی آپریشن میں متعڈ خواتین و بچوں کی گمشدگی پر اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کے عالمی اداروں کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستانی فوج نے سوئی بلوچستان میں انیس بلوچ خواتین و بچوں کو اغوا کیا ہے اور ایک بچے کو ماں کے ساتھ قتل کیا ہے۔ اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کے چیمپیئن کہاں ہیں؟
بلوچ رہنما نے کہا ہے کہ اب دنیا کو پاکستانی فورسز کی جانب سے بلوچستان میں قتل عام، نسل کشی اور جبری گمشدگیوں پر اپنی خاموشی توڑنی چاہیے۔
انہوں نے اپنے ٹوئیٹ پیغام میں ضلع کیچ میں چار دنوں سے جاری فوجی آپریشن کے حوالے سے کہا ہے کہ پاکستانی فوج زعمران میں فضائی اور زمینی آپریشن میں بلا تفریق بلوچوں کو قتل کر رہی ہے۔ ان جرائم کو نظر انداز کرنا اقوام متحدہ کیلئے باعث شرم ہے۔

Share on
Previous article

حسیـن معروفـی کیست؟

NEXT article

بر دانش آموزان بلوچ چه می گذرد؟

LEAVE A REPLY