وطن واپسی کے افواہ پاکستان کے گھڑے گئے جھوٹ ہیں – قریبی ذرائع خان قلات

MUST READ

بيست و هفتم مارس  روزی سياه در تاريــخ بلوچستــــان

بيست و هفتم مارس روزی سياه در تاريــخ بلوچستــــان

دادگاههای ناعادلانە ایران، بازداشت های خودسرانه روزنامەنگاران و سلب آزادی مطبوعات”

دادگاههای ناعادلانە ایران، بازداشت های خودسرانه روزنامەنگاران و سلب آزادی مطبوعات”

گلوکار اُستاد منہاج مختار کے گھر پر حملہ کی مذمت کرتے ہیں۔ بی این ایم

گلوکار اُستاد منہاج مختار کے گھر پر حملہ کی مذمت کرتے ہیں۔ بی این ایم

بلوچستان ءِ راجی جنزءِ دیمپان چے اَنت؟ سیمی بهر

بلوچستان ءِ راجی جنزءِ دیمپان چے اَنت؟ سیمی بهر

بلوچستان میں ریفرینڈم نہیں چاہتے: حیر بیار مری

بلوچستان میں ریفرینڈم نہیں چاہتے: حیر بیار مری

گپ و ترانے چا گیبنءَ گون شهید حیات بیوسءِ گهارءَ

گپ و ترانے چا گیبنءَ گون شهید حیات بیوسءِ گهارءَ

نامه محمد صابر ملک رئیسی پس از برخورد های تبعیض آمیز دوباره

نامه محمد صابر ملک رئیسی پس از برخورد های تبعیض آمیز دوباره

بیست ءُ یک فروری ماتی زبانانی میان اُستمانی روچءِ بابتءَ گپ وترانے گون ملاّ مراد ءَ

بیست ءُ یک فروری ماتی زبانانی میان اُستمانی روچءِ بابتءَ گپ وترانے گون ملاّ مراد ءَ

ڈھاکہ سے شاہ باغ مومنٹ کے کارکن شکیل سے گفتگو

ڈھاکہ سے شاہ باغ مومنٹ کے کارکن شکیل سے گفتگو

Reports of military operations in New Kahan Quetta and Dera Bugti Balochistan

Reports of military operations in New Kahan Quetta and Dera Bugti Balochistan

بولان سے بلوچ خواتین کی اغواء ، پاکستان بنگلہ دیش کی تاریخ دہرا رہا ہے: فرزانہ مجید بلوچ

بولان سے بلوچ خواتین کی اغواء ، پاکستان بنگلہ دیش کی تاریخ دہرا رہا ہے: فرزانہ مجید بلوچ

FRIENDS OF MY NATION

FRIENDS OF MY NATION

بلوچستــــانءِ هیروشیمـــا

بلوچستــــانءِ هیروشیمـــا

لالچ ءُ پاکستان: پت ءُ چُک یا چُک ءُ پت؟

لالچ ءُ پاکستان: پت ءُ چُک یا چُک ءُ پت؟

ماتی زبان – گوس بھاربلوچ

ماتی زبان – گوس بھاربلوچ

وطن واپسی کے افواہ پاکستان کے گھڑے گئے جھوٹ ہیں – قریبی ذرائع خان قلات

2020-03-31 11:29:07
Share on

لندن / اطلاعات کے مطابق خان قلات سلیمان داود نے وطن واپسی اور پاکستان سے کسی بھی ممکنہ ڈیل کے خبروں کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایسے خبروں میں کوئ صداقت نہیں خان قلات کے قریبی حلقوں سے معلوم ہوا ہے کہ خان قلات سلیمان داود نے میڈیا میں اسکی وضاحت کرنے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ اخبارات اور پارلیمنٹ اس غیر فطری ریاست کے اپنے ہیں وہ ان سے نام نہاد بِل پاس کرائیں یا جھوٹی خبریں دیں انہیں کوئ نہیں روک سکتا ، بار بار ایسے افواہوں اور جھوٹ کے پلندوں کا جواب دینا میں مناسب نہیں سمجھتا ، پاکستان کی بنیاد جھوٹ ہے اس لیئے صرف جھوٹ پر چل رہی ہے یہ وہی ملک ہے جو 10 سالوں تک دنیا سے کہتی رہی کہ اسے اسامہ بن لادن کا کوئی اتا پتہ معلوم نہیں لیکن آخر میں اسامہ اسکے چھاونیوں کے بغل سے سامنے آگیا ، ایسے ملک کے افواہوں پر کان دھرنا یا اس کے ہر جھوٹ کا جواب دینا بالکل ضروری نہیں پاکستان کی اصلیت ہر کوئ جانتا ہے ، اس طرح پاکستان ہر روز ایک جھوٹ گڑھ کر اپنے نام نہاد میڈیا میں جاری کردے تو کیا میں روزانہ اس کے جھوٹوں کا جواب دوں اور صفائیاں دیتا پھروں ، اس لیئے میں اسے اہمیت ہی نہیں دیتا ہوں اور قوم کو بھی ایسے افواہوں پر کان نہیں دھرنا چاہئے ، خان کے قریبی حلقوں کے مطابق محمود خان اچکزئی سے ملاقات پر انہوں نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ محمود خان اچکزئی کسی بات کو بیچ میں لائے بغیر صرف ایک دوستانہ ملاقات کرنا چاہتا تھا ، اب اگر وہ یا کوئی اور اس ملاقات کو کوئی اور رنگ دینا چاہتا ہے تو یہ محض خام خیالی ہوگی ، بلوچستان کے متعلق میرا موقف واضح ہے نا میں اس حوالے سے کوئ ڈِیل کروں گا اور نا ہی یہ میری خواہش ہے ۔

khan kalat

Share on
Previous article

بلوچی زبانءِ شاعرءُ قلمکار هدامرزی واجه عبدالرحمان پهوالءِ شعرے اوغانستانءَ طالبانی حکومتءِ دورءَ

NEXT article

جئے سندھ متحدہ محاذ کے کارکن شهید سرویچ پیرزادہ کے والد لطف علی سے گفتگو

LEAVE A REPLY