پاکستان نے دہشت گردی کا ابتدا بلوچستان پر قبضے سے کیا:حیربیارمری

MUST READ

اقراء ریزیڈنشل اسکول اینڈ کالج مری میں تشدد شدہ بلوچ طالبعلم سے گفتگو

اقراء ریزیڈنشل اسکول اینڈ کالج مری میں تشدد شدہ بلوچ طالبعلم سے گفتگو

کراچی: بلوچ ٹیک ویژن کے زیر اہتمام سافٹ ویئر نمائشی پروگرام

کراچی: بلوچ ٹیک ویژن کے زیر اہتمام سافٹ ویئر نمائشی پروگرام

نامه جمعی از علمای اهل سنت که خواستار اعزام هئیت تحقیق در مورد ترورعلمای اهل سنت درایران هستند

نامه جمعی از علمای اهل سنت که خواستار اعزام هئیت تحقیق در مورد ترورعلمای اهل سنت درایران هستند

جمعیت علماء اسلام ءُ جماعت اسلامی مئے جَنگ ءُ تشدد کنگءِ ذمہ واراں انت ۰ پنجاب یونیورسٹیءِ بلوچ نودربر

جمعیت علماء اسلام ءُ جماعت اسلامی مئے جَنگ ءُ تشدد کنگءِ ذمہ واراں انت ۰ پنجاب یونیورسٹیءِ بلوچ نودربر

به گروگان گرفتن زنان و کودکان بلوچ اوج ذلت وحقارت اشغالگران

به گروگان گرفتن زنان و کودکان بلوچ اوج ذلت وحقارت اشغالگران

بلوچ قوم اپنی توجہ ثانوی اور غیر ضروری مسلوں پر لگانے کے بجائے ابتدائی اور اصل مسلۂ یعنی قومی آزادی کی جدوجہد کو مضبوط اور موثر بنانے پر مرکوز کریں ، بلوچ قوم دوست رہنما حیربیار مری کا قوم سے اپیل

بلوچ قوم اپنی توجہ ثانوی اور غیر ضروری مسلوں پر لگانے کے بجائے ابتدائی اور اصل مسلۂ یعنی قومی آزادی کی جدوجہد کو مضبوط اور موثر بنانے پر مرکوز کریں ، بلوچ قوم دوست رہنما حیربیار مری کا قوم سے اپیل

بر دانش آموزان بلــوچ چه می گـذرد؟ بخش سوم

بر دانش آموزان بلــوچ چه می گـذرد؟ بخش سوم

تربتءَ ڈاکٹر کالونیءِ بلوچ چک ءُ جنیانی محاصرهءِ بابتءَ گلگدارے گون ایچ آر سی پی کیچءِ واجہ غنی پروازءَ

تربتءَ ڈاکٹر کالونیءِ بلوچ چک ءُ جنیانی محاصرهءِ بابتءَ گلگدارے گون ایچ آر سی پی کیچءِ واجہ غنی پروازءَ

بلوچستان ءِ راجی جنزءِ دیمپان چے اَنت؟

بلوچستان ءِ راجی جنزءِ دیمپان چے اَنت؟

هجوم لشکر تمدن ستیز خامنه ای و العبادی به کوردستان مستقل

هجوم لشکر تمدن ستیز خامنه ای و العبادی به کوردستان مستقل

ملت پارس به آفت نژاد پرستی مبتلاست

ملت پارس به آفت نژاد پرستی مبتلاست

پشتون قوم دوست روڑ ،نالی کی سیاست سے نکل کر پاکستانی قبضہ گریت کے خلاف آواز بلند کریں : حیربیار مری

پشتون قوم دوست روڑ ،نالی کی سیاست سے نکل کر پاکستانی قبضہ گریت کے خلاف آواز بلند کریں : حیربیار مری

پرچے ناشریں ڈنّی یاں مئے مَچکَدَگاں ماندارَگ اَنت؟

پرچے ناشریں ڈنّی یاں مئے مَچکَدَگاں ماندارَگ اَنت؟

فاجعه آفرینی باندهای تبهکارزابلی در بلوچستـــان اشغالی

فاجعه آفرینی باندهای تبهکارزابلی در بلوچستـــان اشغالی

بيست و هفتم مارس  روزی سياه در تاريــخ بلوچستــــان

بيست و هفتم مارس روزی سياه در تاريــخ بلوچستــــان

پاکستان نے دہشت گردی کا ابتدا بلوچستان پر قبضے سے کیا:حیربیارمری

2020-03-20 15:46:27
Share on

ندن/ بلوچ قومی رہنما اور فری بلوچستان موومنٹ کے سربراہ حیربیار مری نے سماجی رابطے کے ویب سائٹ فیس بک پر اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ “پاکستان کے امدادی فنڈ کو منسوخ کرنے پر ہم ٹرمپ انتظامیہ کے فیصلے کو خوش آئند کہتے ہیں۔ بلوچستان کے اسٹریٹجک ساحل پر قبضہ جمانے کے لیئے چین کے منصوبے کی حمایت کرنا اور مقبوضہ بلوچستان میں اپنی فوج کو مزید دوام بخشنے خاطر لاکھوں ڈالر کا استعمال کیے جانا۔ پاکستان کی خارجہ پالیسی دہشت گردی اور دوغلا پن پر مبنی ہے پاکستان نے دہشت گردی کا ابتدا اپنے ہمسائے ملک بلوچستان پر قبضے سے کیا اور اس کے بعد پاکستان نے دہشت گردی کو ہندوستان و افغانستان میں وسعت دیا۔ پاکستان کی نئی حکومت کی جانب سے امن کی باتیں دھوکہ بازی اور دوغلہ پن کے سوا اور کچھ نہیں، یہ بات اب ڈھکی چھپی نہیں کہ پاکستان کی سول حکومت، عدلیہ اور میڈیا پاکستان آرمی کے ماتحت ہیں

انہوں نے کہا دہشت گردی کے نام پر پاکستان نے امریکہ سے لاکھوں ڈالر لیے جبکہ اس کے عوض پاکستان نے دہشت گردوں کو پناہ گاہیں فراہم کیا جیسا کہ اسامہ بن لادن اور ملا عمر، افغانستان میں ناٹو افواج پر حملہ کرنے کیلئے طالبان کو مالی کمک پہنچا کر ان کی تربیت کیا گیا۔ پاکستان امریکہ اور یو این کے نامزد دہشت گرد، جیسا کہ مسعود اظہر اور سید صلاالدین، کو بھی محافظ اور پناہ گاہیں فراہم کررہی ہے جو ہندوستان میں مزہبی دہشت گردی میں ملوث ہیں۔

حیربیار مری نے کہا کہ انڈیا کو اس حقیقت سے رائے فرار اختیار نہیں کرنا چاہیے کہ پاکستان کشمیر کو اپنا حصہ بنانے کیلئے انتھک کوشش کرنے میں پرعزم ہے۔ پاکستان نہ کشمیر میں دخل اندازی کرنے سے باز آجائے گا اور نہ ہی بلوچستان میں، اس موجودہ حالات کا سامنا کرنے کے واسطے انڈیا کو چاہیے کہ وہ ایک کنکریٹ پالیسی تشکیل دے

 

Share on
Previous article

اپوزیسیون مرکزگرای پارس چه در سر دارد؟

NEXT article

در اقدامی انتقامجویانه، سه زندانی سیاسی در زندان زاهدان اعدام شدند

LEAVE A REPLY